ضیائی شخصیات  

حضرت شیخ مرزا کامل بدخشی کشمیری

حضرت شیخ مرزا کامل بدخشی کشمیری رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ آپ احمد یسوی ترکستانی کی اولاد و امجاد سے تھے آپ کے دادا اپنے وطن سے تاشقند آئے وہاں سے بدخشاں پہنچے اور ایک عرصہ تک قیام پذیر رہے۔ اکبر بادشاہ کے زمانے میں برصغیر ہندوستان میں آئے دربار میں ملازمت کرلی ملک محمد خان کا خطاب پایا اور کشمیر کی نظامت ملی ان دنوں مرزا کامل ابھی بچے ہی تھے اور خواجہ حبیب اللہ عطار کے زیر تربیت تھے بارہ سال کی عمر میں بیعت ہوئے اور دنیا اور احوال دنیا سے کنارہ کش&nb...

حضرت مولانامفتی غلام سرور لاہوری

حضرت مولانامفتی  غلام سرور لاہوری رحمۃ اللہ تعالٰی علیہ نام ونسب: آپ کا نام غلام سرور بن مفتی غلام محمد قریشی ،اسدی،ہاشمی ہے۔ تاریخ و مقامِ ولادت: آپ  کی ولادت 1244 ھ/ 1837 ء میں محلہ کوٹلی مفتیاں ،لاہور میں ہوئی۔ تحصیلِ علم:آپ نے اپنی ابتدائی تعلیم والدِ ماجد سے حاصل کی، علمِ طب بھی انہی سے حاصل کی، پھر علامہ مولانا غلام اللہ قصوری ثم لاہوری کی خدمت میں حاضر ہوکر تمام مروجہ علوم، تاریخ اور لغت کی تحصیل کی۔ بیعت: آپ اپنے والدِ ماجد کے د...

حضرت جمال شاہ قادری چشتی

حضرت جمال شاہ قادری چشتی           آپ صاحب  کشف و کرامت بزرگ ہوئے ہیں، آپ کی قبر مبارک پر شاندار گنبد بنا ہوا ہے۔  محکمہ  اوقاف حکومت سندھ کی تحویل میں ہے،  تین اور قبور بھی ہیں لیکن کسی کے متعلق بھی معلومات فراہم نہ ہوسکیں ، ۲۵/۲۶/ذی الحجہ کو محکمہ اوقاف کی طرف سے ہر سال شاندار عرس منایا جاتا ہے۔           آپ کا مزار پرانوار مچھی میانی م...

فاضل جلیل مولانا محمد قربان علی رضوی چشتی

دلشاد پور بھیلا گنج ضلع کٹیہار بھار ولادت حضرت مولانا محمد قربان علی رضوی چشتی بن محمد اختر مبین ۱۶؍اکتوبر ۱۹۴۷ء کو موضع دلشاد پور ضلع کٹیہار بہار میں پیدا ہوئے۔ آپ کا حسب و نسب خواجۂ ہند حضرت خواجہ معین الدین اجمیری سنجری رضی اللہ تعالیٰ عنہ سے منسلک ہوتا ہے۔ اسی وجہ سے آپ چشتی کہلاتے ہیں۔ تعلیم وتربیت مولانا قربان علی رضوی نے قرآن پاک گھرہی پر اپنے چچا منشی قمر الدین سے پڑھا۔ پھر بائسی ضلع پورنیہ کے علاقہ میں ت...

فقیہہ ذیشان مولانا محمد فاروق رضا القادری

مفتی دار العلوم منظر اسلام بریلی شریف ولادت حضرت مولانا مفتی محمد فاروق رضا القادری ۱۹۵۵ء کو ہر ہر پور بریلی میں پیدا ہوئے۔ سن شعور کو پہنچنے کے بعد گھر پر ہی تعلیم کا سلسلہ شروع کردیا۔ گاؤں ہی کے جو نیئر ہائی اسکول میں داخلہ لیا اور پانچویں درجہ تک ہندی میں تعلیم حاصل کی اور گھر، پر قرآن مجید پڑھتے رہے۔ کچھ ہی دنوں میں مدرسہ قادریہ کے نام سے ایک مدرسہ قائم ہوا۔ جس میں آپ کے چچا منشی ولی محمد رضوی مدرس مقرر ہوئے مفتی مح...

عمدۃ المقررین مولانا عبدالخالق رضوی

مدرس دار العلوم منظر اسلام بریلی شریف تارا باڑی بائسی ضلع پورنیہ بہار جو دوندیوں کے درمیان واقع ہے۔ اس ندی کا نام جہاندی کنکھی ہے۔ یہ جگہ ایسی زر خیز زمین ہے۔ جہاں بڑے بڑے علماء وقت پیدا ہوئے یہ مقام لالہ زار، سبزہ زار، شاداب اور خوش گوار رہا ہے۔ ان دونوں ندیوں کے سنگمی منظر زمانے والوں کے لیے ایک فرحت گاہ اور رحمت و کرم کا حسین منظر ہے۔ یہ موضع حضرت علامہ مولانا عبدالخالق رضوی کی ننہال ہے۔ ولادت اسی سرزمین تارا با...

صدر المفتین مفتی قاضی عبدالرحیم رضوی بستوی

مفتی مرکزی دارلافتاء ۸۲۔ سود اگران بریلی شریف ولادت فقیہہ اہلسنت مولانا مفتی قاضی عبدالرحیم رضوی بن قاضی زکی الرحمٰن بن احمد اللہ عرف بیر علی بن محمد بخش موضع جسجوا قاضی (جگجوا) تحصیل ڈمر یا گنج برگنہ رسولپور ضلع بستی میں یکم جولائی ۱۹۳۶ء کو پیدا ہوئے۔ والدین کی شفقتوں کے ساتھ پرورش ہوئی۔ قاضی صاحب کے خاندانی شجرہ سے معلوم ہوتا ہے آپ حضرت خلیفۂ اول امیر المومنین سیدنا ابو بکر صدیق رضی اللہ تعالیٰ عنہ کی نسل سے ہیں۔ ...

راغب المصلین مولانا شمس الدین احمد رضوی

صدر المدرسین ومفتی ومسعود العلوم چھوٹی تکیہ بہرائچ کوور (جی ٹی روڈ) ہزاری باغ بہار شیر شاہ سوری روڈ سے تقریباً چھ۶ کلو میٹر شمال کی جانب دامن کرہ میں آباد ہے اور وقوع کے اعتبار سے بہت پر بہار ہے۔ مولانا مفتی شمس الدین رضوی صدیقی کے جد کریم عبداللطیف مرحوم کے بزرگوار شیخ بھکاری بریلی شریف سے ترک وطن کر کے مقام راگڑیہہ ضلع ہزاری باغ (بہار) میں سکونت پذیر ہوئے۔ پھر عبداللطیف نے راگڑیہہ سے منتقل ہوکر کودر میں سکونت اختیار کی، راگڑی...

صوفی زماں مولانا محمد سراج الباری رضوی

شھباز پور ضلع ویشالی، بہار ولادت حضرت مولانا شاہ محمد سراج الباری رضوی بن مولانا عبدالباری بن اصغر علی کی ولادت بمقام شہباز پور پوصت پرنیہ ضلع ویشالی بہار میں ۱۳۴۶ھ میں ہوئی۔ تعلیم وتربیت ابتدائی تعلیم جب مولانا محمد سراج الباری سخن آموزی کیم نزل عبور کر چکے تو آپکے والد بزرگوارنے آپ کی بسم اللہ خوانی کی رسم اداکرائی۔ اور پھر م حلہ ہی کےمکتب میں ختم قرآن شریف کی سعادت حاصل کی، بعدہٗ مدرسہ علیمیہ انوار العلولم دامو...