اَیُّھَا الْعُشَّاق شیدائے جنابِ مصطفیٰﷺ

اَیُّھَا الْعُشَّاق شیدائے جنابِ مصطفیٰﷺ
عینِ ایماں ہے تولّائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

روکشِ گُل گشتِ جنّت ہے اگر ہوئے نصیب
شعل اوصافِ سراپائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

لا کہ خورشیدِ قیامت کو تَصدّق کیجیے
بر سرِ یک نور سیمائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

باعثِ ایجاد طاقِ جنّتِ فردوس ہے
طاقِ ابرو قوس زیبائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

اَبْدَبُ الْاَشْفَار جن کے وصف میں وارد ہُوا
ہیں وہ مژگانِ صف آرائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

ہے نصیب العین جن کے کحل مَا زَاغَ الْبَصَر
ہے وہ زیبا چشمِ رعنائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

مظہرِ نورِ الٰہی حَبَّذَا صَلِّ عَلٰی
بینیِ اَقدس معلّائے جناب ِ مصطفی ٰﷺ

 

چشمۂ آبِ بَقا تسنیم و کوثر سلسبیل
رشحۂ لعلِ شکرخائے جنابِ مصطفیٰ

 

عارضِ حورانِ جنّت کو نہ دیکھے آنکھ بھر
والہِ حُسنِ کفِ پائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

آنکھ خورشیدِ قیامت سے لڑائیں لاکھ بار
عاشقانِ چشم رعنائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

حور و غلماں بن کے اُس کے تماشائی ہوئے
جو ہوا محوِ تجلّائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

گر جنوں بھی ہو تو عشقِ احمدی کا ہو جنوں
ہو اگر سودا تو سودائے جنابِ مصطفی ٰﷺ

 

رات دن ہے یہ دعائے کافؔیِ شوریدہ حال
کر عطا، یا رب! تولّائے جنابِ مصطفی ٰﷺ
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔(دیوانِ کافؔی)


متعلقہ

تجویزوآراء