عُشر  

کتنی مقدار پر عشر نکالنا ضروری ہے اور کتنا عشر ہے؟

کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام اس مسائل کے بارے میں:  ایک شخص کی زرعی زمین جس میں وہ خود کاشت کاری  کرتا ہے تو اس کی عشر کی کیا ترکیب ہو گی کہ وہ کب واجب ہو گا ؟یعنی کتنی مقدار وصولِ زرع ہو تو کتنا عشر ہو گا؟ الجواب بعون الملك الوهاب صدر الشریعہ مفتی امجد علی اعظمی علیہ الرحمہ تحریر فرماتے ہیں:" عشری زمین سے ایسی چیز پیدا ہو جس کی زراعت سے مقصود زمین سے منافع حاصل کرنا ہے تو اس پیداوار کی زکوٰۃ فرض ہے اور اس زکوٰۃ کا نام عشر ہے"۔۔۔۔ " جو کھ...

بٹائی کی زمین پر عشر

ایسا شخص ہے جس کی اپنی زمین نہیں ہے لیکن اس نے کسی سے زمین بٹائی پر لی ہے۔ اس میں وہ کاشت کرتا ہے۔ اور بٹا ئی اس کی نصف،ثلث یا ربع  میں سے کوئی بھی مقرر ہو ۔ اور جب فصل کی پیدا وا رحاصل ہو تو زمین کا مالک اس میں جو بٹائی(نصف،ثلث،ربع) میں سے جو مقرر کی ہے وہ اس کو دیتا ہے۔تو اس صورت میں عشر کی کیا ترکیب ہو گی؟ الجواب بعون الملك الوهاب دوسرے کی زمین میں بٹائی پر کاشت کرنے کی صورت میں جو پیداوار حاصل ہو گی اس میں جتنا حصہ مالک کا ہے اس کا عشر م...

جانوروں کے اگائے گئے چارے پر عشر کا حکم

کیا فرماتے ہیں علماء کرام اس مسئلہ کے بارے میں کہ ایک شخص کے پاس زمین کا حصہ موجود ہے اس میں وہ جانوروں کا چارہ اگاتا ہے۔ جس میں سے وہ کچھ بیچ دیتا ہے اور کچھ اپنے جانوروں کے لئے رکھ لیتا ہے۔تو کیا اس صورت میں وہ شخص عشر دے گا یا نہیں؟ الجواب بعون الملك الوهاب اگر جانوروں کا چارہ باقاعدہ کا شت کیا تو اس میں بھی عشر ہوگا چاہے اسے بیچے یا نہیں بیچے۔ اس لئے کہ ایسی چیز جس سے زمین کے منافع مقصود ہوں اور وہ بالقصد کا شت کی جائے تو اس میں عشر واجب ہوگا...

مستحق بہن بھائی کو عشر دینا

السلام علیکم مفتی صاحب!شریعت کی روشنی میں اس مسئلہ کی وضاحت فرمادیں کہ  اگر کوئی شخص خود فقیر ہو یا اس کے  گھر والوں میں چندایک افراد فقیر ہیں تو وہ شخص گھر میں ہی عشر  زیرِ استعمال لا سکتا ہے؟ الجواب بعون الملك الوهاب اپنے بہن بھائی کو جو شرعی فقیر ہوں عشر دے سکتے ہیں۔والدین ،بیوی اور بچوں کو نہیں دے سکتے۔اسی طرح خود بھی عشر نہیں رکھ سکتے اگر چہ شرعی فقیر ہوں کیونکہ عشر واجب ہونے کا سبب زمین نامی یعنی قابل کاشت زمین سے حقیقتاً پید...

عشر کے مصارف

کیا فرماتے ہیں علماء دین متین اس مسئلہ کے بارے میں کہ مصارفِ عشر کیا ہیں؟ الجواب بعون الملك الوهاب عشر کے وہی مصارف ہیں جو زکوٰۃ کے مصارف ہیں۔ امام قاضی خان علیہ الرحمہ لکھتے ہیں: "یصرف العشر الی من یصرف الیہ الزکاۃ"۔ یعنی عشر ہر اس شخص کو دیا جاسکتا ہے جس کو زکوٰۃ دی جا سکتی ہے۔[فتاوٰی قاضی خان علی ھامش الہندیہ،جلد1،صفحہ277دارالفکر بیروت]۔...

عشر ٹھیکدار اور کاشتکار دونوں دیں گے؟

السلام علیکم ورحمۃ اللہ! کیا فرماتے ہیں مفتیان کرام اس مسئلہ کے بارے میں زمین ٹھیکے پر لی ہے تو عشر  کون دیگا یعنی زمین ٹھیکے پر لینے والا یا دینے والا؟ الجواب بعون الملك الوهاب جس شخص نے زمین ٹھیکہ پر لی ہوئی ہوا س سے حاصل ہونے والی فصل کا عشر اسی پر لازم ہوتا ہے زمین کے مالک پر لازم نہیں ہو تا۔ صدر الشریعہ مفتی محمد امجد علی اعظمی صاحب علیہ الرحمہ  فرماتے ہیں:"زمین جو زراعت کے لئے نقدی پر دی جاتی ہے امام صاحب کے نزدیک اس کا عشر زمیندا...

گندم سے حاصل ہونے والے بھوسے پر عشر کا حکم

جوگندم  بالیوں سے نکالنے کےبعد دانہ الگ اور بھوسہ الگ ہو جاتا ہے۔ تو کیا جو بھوسہ ہے اس پر عشر ہو گا یا نہیں؟ الجواب بعون الملك الوهاب  ہمارے دور میں گندم کی کاشت کے ساتھ ساتھ بھوسہ بھی مقصود ہوتا ہے یہی وجہ ہے کہ  بھوسہ کو مہنگے داموں بیچا جاتا ہے۔ لہذا اس پر عشر ہونا چاہئے۔ تنویرالابصارودرمختارمیں ہے: "الافیھالایقصدبہ استغلال الارض نحوحطب و قطب۔۔۔وحشیش۔۔۔حتی لو اشغل ارضہ بھا یجب العشر"۔  ترجمہ:ان چیزوں میں عشر نہیں جن سے ز...