Sahabiyat (respected female companions of the Holy Prophet)  

میمونہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی آزاد کردہ کنیز،ان سے حضرت علی کرم اللہ وجہ اور زیاد بن ابو سودہ نے روایت کی،ابو نعیم کے نزدیک میمونہ سعد کی دختر تھیں،اورابنِ مندہ نےان کا علیحدہ ذکرکیا ہے۔ معاویہ بن صالح نے زیاد بن ابوسودہ سے،انہوں نے میمونہ سے روایت کی کہ انہوں نے حضور ِاکرم صلی اللہ علیہ وسلم سے بیت المقدس کے بارے میں دریافت کیا،فرمایا،یہ وہ مقام ہے،جہاں حشر نشر بپا ہوگا اس لئے وہاں جاؤ...

اور جناب لبابہ،اسماء،سلمی اور سلامہ کی اخیانی بہن تھیں،جوعمیس خثعمی کی بیٹیاں تھیں اور ان کا اخیانی بھائی محمیہ بن جزء الزبیدی تھااور ان سب کی ماں کا نام ہند دختر عوف کنانیہ تھا،ایک روایت میں حمیریہ مذکور ہے،اور جس نے حمیریہ لکھاہے،اس نے ان کا نسب یوں لکھاہے،ہند دخترعوف بن حارث بن حماطہ بن جرش از بنوحمیر،اور یہ وہی خاتون ہیں،جنہیں سُسرال کے لحاظ سے اکرم الناس کہاجاتا ہے،کیونکہ رسولِ کریم رؤف رحیم علیہ الصلوٰ ۃ والتسل...

محیاہ دختر خالد بن سنان،ابو موسیٰ نے اجازۃً ابوالرجاء احمد بن محمد بن عبدالعزیز قاری سے،انہوں نے ابوبکر محمد بن احمد صفار سے ،انہوں نے محمد بن علی بن عمرو سے،انہوں نے ابوبکر احمد بن ابراہیم جرجانی سے،انہوں نے محمد بن عمیر رازی سے،انہوں نے عمرو بن اسحاق بن علاء سے،انہوں نے اپنے دادا ابراہیم بن علاءسے،انہوں نے ابومحمد قرشی ہاشمی سے،انہوں نے ہشام بن عروہ سے، انہوں نے ابن عمارہ سے،انہوں نے اپنے والد عمارہ بن حزن بن شیطا...

میمونہ دختر ابوعتبہ یا عنبسہ،یہ ابن مندہ اور ابوعمرکا قول ہے،ابو نعیم کے مطابق یہ لفظ عُیَب کی تصحیف ہے،منتجع بن مصعب ابوعبداللہ العبدی نے ربعیہ دختر مرثد سے داوروہ بنو فریع کے پاس ٹھہراکرتی تھیں،انہوں نے منبہ سے،انہوں نے میمونہ دختر عُیَب سے(ایک روایت میں دختر ابی عنبسہ آیا ہے) جو حضور نبیِ کریم رؤف رحیم کی آزاد کردہ کنیز تھیں،روایت کی،کہ ایک خاتون حضرت عائشہ کے پا س آئی،اور کہا اے عائشہ حضورِاکرم سے میرے بارے م...

میمونہ دختر عبداللہ بن بنو یزید از بنو بلی،انہیں جعادرہ بھی کہتے تھے اور یہ لوگ بنو امیہ بن زید انصاری کے حلیف تھے،یہ ابن اسحاق کا قول ہے،اس خاتون کے اسلام کا ذکر کیا ہے،اور ابن ِہشام نے ان کا نام لکھا ہے،یہ وہ خاتون ہیں جنہوں نے کعب بن اشرف (یہودی)کے ان اشعار کا جواب لکھا،جو اس یہودی نے مقتولینِ بدر کے سوگ میں تصنیف کئے تھے،جناب میمونہ کے اشعار کا پہلا شعر درج ذیل ہے۔ بَکت عینُ مَن یَسبکِی لِبَدرٍوَاَھلِ...

میمونہ دختر کردم ثقفیہ،ان سے یزید بن مقسم نے روایت کی،ابویاسر نے باسنادہ عبداللہ سے انہوں نے اپنے والدسے،انہوں نے یزید بن ہارون سے،انہوں نے عبداللہ بن یزید بن مقسم بن ضبتہ الطائفی سے روایت کی،کہ انہوں نے اپنی پھوپھی سارہ دختر مقسم سے،انہوں نے میمونہ دختر کردم سے سُناکہ انہوں نے رسولِ اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کو مکے میں دیکھا،آپ اُونٹنی پر سوار تھے،اور میں اپنے والد کے ساتھ تھی،حضورِ اکرم کے ہاتھ میں کتاب کی طرح ایک د...