Hanafi Scholars  

Ahmed Bin Abbas Bin Hussain

           احمد بن عباس بن حسین بن عیاض سمر قندی: بڑے فقیہ اور عالم فاضل تھے،علمائے ہمعصر میں سے کسی کی یہ جرأت نہ تھی کہ علم و کیاست اور تیزی طبع و پرہیز گاری میں آپ سے ہمسری کر سکت۔ابو نصر کنیت تھی۔آپ کی نسل سعد بن عبادہ انصاری خزرجی صحابی سے ملتی ہے اور عیاض آپ کے اجداد میں سے کسی کا نام ہے جس کی طرف آپ منسوب ہیں۔           آپ سمر قند میں رہتے تھے،ف...

Muhammad Bin Ahmed Abu Bakar

           محمد بن احمد ابو بکر الاسکاف البلخی: اپنے وقت کے امام اور فقیہ جلیل القدر تھے،فقہ کو اپ نے محمد بن سلمہ تلمیذ ابی سلیمان جو زجانی سے پڑھا اور آپ سے ابو بکر اعمش محمد بن سعید متوفی ۳۴۸ھ؁اور ابو جعفر ہندوانی نے تفقہ کیا۔وفات آپ کی ۳۳۳ھ؁ میں ہوئی۔نفھات الانس میں لکھا ہے کہ اپ تیس سال سے روز مرہ روزہ رکھا کرتے تھے،جب نزع کا وقت آیا تو لوگ پانی سے پنبہ تر کر آپ کے منہ کے آگے لے گئے مگر آپ نے...

Ahmed Bin Walaadnahavi

              احمد بن محمد بن ولادنحوی: ابو العباس کنیت تھی،فقیہ فاضل جامع معقول اور نحوی تھے،سیوبہ کی مبرد پر کتاب انتصار اور کتاب انتصار اور کتاب المقصود والممدود بطور حروف معجم تصنیف کیں،۳۳۲ھ؁ میں وفات پائی۔ (حدائق الحنفیہ)...

Ahmed Surkhaki

          احمد سرخکی عبد ارلرحمٰن سرخکی: فقیہ اجل عالم اکمل تھے،کنیت ابو حامد تھی،قصبہ سرخک میں جو نیشار پور کے پاس واقع ہے،رہا کرتے تھے۔آپ نے ابا ازہر العبدی اور محمد بن یزید سلمی سے سنا اور محمد بن یزید سے حفص بن عبد الرحمٰن کی کتابوں کو روایت کیا اور آپ سے ابو العباس احمد بن ہارونے روایت کی،وفات آپ کی ماہ رمضان ۳۲۶ھ؁ میں[1] ہوئی۔   1۔وفات ۳۱۶ھ،جواہر المضیۃ (مرتب) (حدائق الحنفیہ)   ...

Ishaq Shashi

           اسحٰق بن ابراہیم الشاشی المسر قندی الخطیبی: اپنے زمانہ کے عالم فاضل شیخ ثقہ تھے مولد آپ کا شہر شاش تھا جو نہر سیحون کے پاس سر حدارترک پر واقع ہے۔ کنیت ابو ابراہیم تھی،آپ نے امام محمد کی جامع کبیر کو زید بن اسامہ راوی سلیمان جو زجانی سے روایت کیا اور ۳۲۵ھ؁میں وفات پائی۔  (حدائق الحنفیہ)...

Makhool Bin Fal Nafsi

           مکحول بن فل نسفی: اپنے زمانہ کے امام فاضل فقیہ کامل عارف مذہب تھے،فقہ کو موسیٰ بن سلیمان جو زجانی تلمیذ امام محمد سے حاصل کیا اور کتاب لؤلوئیات و کتاب الشعاع تصنیف کیں،آپ ہی نے امام ابو حنیفہ سے کتاب شعاع میں یہ روایت کی ہے کہ جو شخص رفع الیدین کرے اس کی نماز فاسد ہوجاتی ہے لیکن یہ روایت اکثر محققین کے نزدیک شذوذات سے ہے جس پر اعتبار نہیں کیا گیا۔وفات آپ کی ۳۱۸ھ؁ میں ہوئی۔ (حدائق الحنفیہ)...

Ahmed Bin Hussain

           احمد بن حسین بروعی : فقہائےکبار اور مشائخ نامدار سے بڑے عالم  فاضل امام وقت مجتہد عصر تھے اور شہر بردع میں جو آذر یا ئیجان متعلقہ حد غربی ایران میں ہے،رہتے تھے،کنیت آپ کی ابو سعید تھی،علم  آپ نے اسمٰعیل بن حماد اور ابی علی دقاق سے حاصل کیا اور آپ سے ابو الحسن کرخی اور ابو طاہر دباسی اور ابو عمر والبطری نے تفقہ کیا۔حافظ الدین نفسی نے کتاب کافی کے باب الیمین فی الطلاق والعتاق می...

Muhammad Ibn Khuzaima

           محمد بن خزیمہ بلخی قلاسی: مشائخ بلخ سے فقیہ متجر صاحب اختیارات فی المذہب تھے،کنیت ابو عبد اللہ تھی،قلاس آ پ کو اس لیے کہاکرتے تھے کہ آپ قلس یعنی وہ رسی بٹوایا کرتے تھے جس سے کشتیاں باندھی جاتی ہیں۔وفات آپ کی ۳۱۴ھ؁ میں ہوئی۔’’نادر جہان‘‘ آپ کی تاریخ وفات ہے۔ (حدائق الحنفیہ)...

Muhammad Bin Salam Balkhi

حدیقۂ چہارم چوتھی صدی کے فقہاء وعلماء کے حالات             محمد بن [1]سلام بلخی: فقیہ فاضل عالم متجرابی حفص کبیر کے معاصرین میں سے صاحب طبقہ عالیہ تھے،ابو نصر کنیت تھی،اکثر فتاویٰ آپ کے نام سے پر ہیں جن میں کہیں نام اور کہیں کنیت سے آپ مذکور ہوئے ہیں۔وفات آپ کی ۳۰۵ھ؁ میں ہوئی۔آپ کا سال وفات لفظ’’نور بزم‘‘ ہے۔   1۔محمد بن محمد بن سلام ’’جواہر المفتیہ(مرتب) ...

Ahmed Bin Ishaq

              احمد بن اسحٰق بن صبیح جو زجانی بڑئے عالم فاضل فقیہ کامل فروع و اصول کے جامع تھے،کنیت ابو بکر تھی،علم ابی سلیمان جو تلیمذ امام محمد سے حاصل کیا،شہر جو زجان جو بلخ کے پاس واقع ہے،آپ کا مولد اور وطن تھا۔آپ کی تصنیفات سے کتاؔب الفرق والتمییز اور کتاب التوبہ یادگار ہیں۔ (حدائق الحنفیہ)...