Hamd Hai Us Zaat Ko Jis ne Musalman Kardiya

حمد ہے اس ذات کو جس نے مسلماں کردیا
عشقِ سلطان جہاں سینہ میں پنہاں کردیا

جلوۂ زیبانےآئینہ کو حیراں کردیا
مہرومہ کو انکے تلؤوں نے پیشماں کردیا

اے شہ لولاک تیری آفرینش کے لیے
حق نے لفظ کن سی پیدا سازو ساماں کردیا

کیا کشش تھی سرورِ عالم کے حسن پاک میں
سیکڑوں کفار کو دم میں مسلماں کردیا

ہوگئی کافور ظلمت دل منور ہوگئے
جس طرح بھی اسں نے اپنا روئے تاباں کردیا

نعمت کونین دیکر ان کے دست پاک میں
دونوں عالم کو خدا نے ان کا مہماں کردیا

یاد فرماکر قسم حق نے زمیں پاک کی
خاک نعلِ مصطفےٰ کو تاجِ شاہاں کردیا

دورہی سےسبزگنبد کی جھلک کو دیکھ کر
عاشقوں نے ٹکڑے ٹکڑے جیب و داماں کردیا

اُس عرب کے چاند کا جلوہ مجھے درکار ہے
جس نے ہر ذرے کو اپنے ماہِ تاباں کردیا

سیکڑوں مردہ دلوں کو روئے ایماں بخش کر
زندۂ جاوید اے عیسیٰ دوراں کردیا

گریہ وزاری نے راتوں کو تری ابرکرم
مثلِ گل صبح قیامت ہم کو خنداں کرگیا

یارسول اللہ اغثنی وقت ہے امداد کا
نفس کافر نے مجھے بیحد پریشاں کردیا

تیر نصرت ایسے نازک وقت میں حامی رہی
نجدیوں نے یا نبی لاکھوں کو شیطاں کردیا

ہے جمیل قادری یہ فضل اللہ و رسول
تیرا مرشد حضرت احمد رضا خاں کردیا

قبالۂ بخشش


All Related

Comments