ضیائے مشائخِ قادریہ  

حضرت جسٹس شیخ جمال بن امیر مالکی

جسٹس شیخ جمال بن امیر مالکی رحمۃ اللہ علیہ اسمِ گرامی:آپ علیہ الرحمہ کا اسم ِ گرامی جمال بن امیر مالکی تھا۔ تاریخ ومقامِ ولادت:جسٹس شیخ جمال بن امیر مالکی رحمۃ اللہ علیہ 1285 ھ میں مکہ مکرمہ میں پیدا ہوئے۔ تحصیلِ علم: جسٹس شیخ جمال بن امیر مالکی رحمۃ اللہ علیہ  نے اپنے چچا مفتی مالکیہ شیخ عابد ودیگر اکابر علماء مکہ سے تعلیم پائی، بالخصوص شیخ عابد مالکی سے علومِ نقلی وعقلی۔ فروع واصول اخذ کئے۔آپ کے دیگر اساتذہ میں علامہ سید بکری شطا شافعی، شی...

حضرت شیخ احمد حضراوی منصوری مکی شافعی

شیخ احمد حضراوی منصوری مکی شافعی رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہ نام ونسب: آپ  کا نام  احمد بن محمد بن احمد بن احمد ابنِ عبیدہ تھا۔(رحمۃ اللہ تعالیٰ علیہم) تاریخِ ومقامِ ولادت:  آپ رحمۃ اللہ علیہ کی ولادت 1252 ھ میں اسکندریہ، عراق میں ہوئی۔ تحصیلِ علم:    آپ رحمۃ اللہ علیہ اپنے والد ماجد کے ہمراہ مکہ مکرمہ میں تشریف لائے  اور یہی سے علم کے حصول کا سلسلہ شروع کیا اور فارغ ہوئے۔ سیرت وخصائص: شیخ احمد حضراوی منصوری مکی شافعی...

حضرت سید مصطفیٰ بن خلیل مکی آفندی

سید مصطفیٰ بن خلیل مکی آفندی رحمۃ اللہ علیہ آپ رحمۃ اللہ علیہ کا اسمِ گرامی سید مصطفیٰ والدِ گرامی کا نام سید خلیل تھا۔ اور بڑے بھائی سید اسماعیل خلیل تھے جو حرم شریف کے محافظ ِ کتب تھے۔1324 ھ کے سفر وزیارت کت موقع پر امام اہلسنت امام احمد رضا خان رحمۃ اللہ علیہ سے اجازت وخلافت پائی۔برادرِ بزرگ سید اسماعیل خلیل کی طرح  آپ بھی امامِ اہلسنت سے والہانہ محبت کرتے تھے۔ ماخذ ومراجع: خلفاء اعلیٰ حضرت (رحمۃ اللہ علیہ)...

حضرت شیخ حسن عجیمی مکی

حضرت شیخ حسن عجیمی مکی رحمۃ اللہ علیہ اسمِ گرامی: آپ علیہ الرحمہ کا نام حسن ، والد کا نام عبد الرحمٰن تھا۔ سیرت وخصائص: حضرت شیخ حسن عجیمی مکی رحمۃ اللہ علیہ بہت بڑے عالم فاضل تھے۔ 10 صفر المظفر  1324 ھ کو مکہ مکرمہ میں اعلیٰ حضرت رحمۃ اللہ علیہ نے سند عطا فرمائی۔علامہ موصوف کی بے شمار تصانیف ہیں۔ ماخذ ومراجع: خلفاء اعلیٰ حضرت(رحمۃ اللہ علیہ)...

حضرت شیخ عبد اللہ فرید کردی

حضرت شیخ عبد اللہ فرید کردی رحمۃ اللہ علیہ اسمِ گرامی: آپ رحمۃ اللہ علیہ کا اسمِ گرامی عبد اللہ فرید اور والدِ ماجد کا نام عبد القادر تھا۔(رحمۃ اللہ علیہما) سیرت وخصائص: جب  آپ کے والدِ ماجد نے اعلیٰ حضرت امام احمد رضا خان رحمۃ اللہ علیہ سے مرویات کی اجازت طلب کی تو آپ نے نہ صرف انہیں اجازت دی بلکہ ان کے صالح جوان بیٹے عبد اللہ فرید کو حدیث، فقہ، تفسیر اور تمام علوم کی اجازت عطا فرمائی۔اس وقت سید عبد اللہ فرید اگرچہ بچے تھےمگر آثارِ سعادت لئ...

حضرت سید علوی بن حسن الکاف الحضرمی

حضرت سید علوی بن حسن الکاف الحضرمی رحمۃ اللہ علیہ آپ کو 24 صفر 1324 ھ کو مکہ مکرمہ میں اعلیٰ حضرت امامِ اہلسنت امام احمد رضا خان رحمۃ اللہ علیہ سے خلافت واجازت عطا ہوئی۔اعلیٰ حضرت رحمۃ اللہ علیہ نے سندِ اجازت میں یہ الفاظ تحریر فرمائے: " فرزند صالح ، جوان ، حرم شریف میں تحصلِ علم کا التزام کرنے والےالکریم السید العلوی بن حسن الکاف الحضرمی(اللہ تعالیٰ انہیں نفع بخش، جلیل الشان بلند پایہ علم بخشے) ماخذ ومراجع: خلفاء اعلیٰ حضرت(رحمۃ اللہ علیہ)...