علمائے احناف  

یوسف بن خالد

        یوسف بن خالدین [1]عمیر سمنی بصری مولیٰ بنی لیث :امام ابو حنیفہ کے شاگردوں میں سے عالم فاضل ، فقیہ کامل، رائے وفتویٰ میں بصیرت تمام رکھتے تھے۔ ابو کالد کنیت تھی ۔مدت تک امام ابو حنیفہ کی صحبت میں بیٹھے اور ان سے بہت کچھ اخذ کیا ۔اوائل میں عثمان فقیہ بصرہ شاگرد تھے جو بعد تعلیم فقہ وحدیث کے امام ابو حنیفہ کی خدمت سے مشرف ہوئے اور چالیس ہزار مسائل مشکلہ جو آپ کے خیال میں متمکن تھے،امام سے حل کئے ، بسب نیک ر...

علی بن مشہر

          علی بن مشہر قرشی کوفی[1]: امام ابو حنیفہ کے ان اصحاب میں سے تھے جنہوں نے فقہ وحدیث کو جمع کیا۔ابو الحسن کنیت تھی۔اپنے زمانہ کے عالم عامل صاحب روایت و درایت اور ثقہ تھے۔حدیث کو اعمش اور ہشام بن عروہ سے سنا اور آپ سے سفیان ثوری نے امام ابو حنفہ کا علم اور ان کی کتب کو اخذ و نقل کیا  ،مدت تک آپ موصل کے قاضی رہے اور ۱۸۹ھ؁ میں وفات پائی ۔ اصحاب صحاح ستہ نے آپ سے تخریج کی۔’’عالم بے...

امام محمد  

          امام بن حسن بن فرقد الشیبانی : امام ابو حنیفہ کے شاگردوں میں سے آپ فقہ  و حدیث و لغت کے امام اور فصیح بلیغ و ادیب بے نظیر تھے ، باپ آپ کا قبیلۂ شیبان سے شہر حرستا کا رہنے والا تھا جو د مشق میں وسط غوطہ کے اندر واقع ہے اور عراق میں آکر واسطہ میں اقامت گزیں ہوا تھا جہاں آپ ۱۳۲ھ؁ یا ۱۳۵ھ؁ میں پیدا ہوئے اور کوفہ میں نشو و نماپایا اور امام ابو حنیفہ وامام ابو یوسف و مسعر بن کدام و سفیان ثوری و ام...

اسد بن عمرو

          اسد بن عمرو بن عامر بن اسلم بن مغیث البجلی الکوافی : امام اعظم کے ان چالیس اصحاب میں سے تھے جو کتب اور قواعد فقہ کی تدوین میں مشغول اور عشرہ متقع مین مثل امام ابو یوسف و محمد وزفر داؤد طائی وغیرہ میںشمار کئے جاتے تھے ۔ آپ نے تیس سال تک امام ابو حنیفہ کے لئے کتابت کی اور انہوں ہی سے حدیث کو سنا اور فقہ کو اخذ کیا ۔ جب امام ابو یوسف فوت ہوئے تو رشید نے بغداد اور وسط کی قضا آپ کے سپرد کی اور اپن...

امام یحییٰ بن زکریا

            یحییٰ بن زکریا بن ابی زائد ہمدانی الکوفی  :کنیت آپ کی ابو سعید تھی ۔آپ حافظ احادیث اور فقیہ ثقہ ، متدین ،متورع،متقن اور ان فضلاء میں شمار کئے جاتے تھے جنہوں نے فقہ حدیث کو جمع کیا امام ابو حنیفہ کے جو چالیس اصحاب تدوین کتب میں مشغول تھے ۔ان میں سے آپ عشرۂ متقد مین میں داخل تھے ۔یحییٰ بن معین کہتے ہیں کہ ابن عباس زمانے میں علم ابن عباس پر منتہیٰ ہوا،پھر لعبی پھر ثوری پھر یحییٰ بن ابی زا...

نوح

              نوح بن دراج نخعی کوفی : کنیت ابو محمد تھی ، فقہ میں امام ابو حنیفہ کے شاگرد تھے اور امام زفرو ابن شبر مہ اور ابن ابی لیلیٰ سے بھی فقہ کو اخذ کیا ۔ حدیث کی روایت امام زفر و امام اعمش اور سعید بن منصر سے کرتے تھے اگر چہ حدی ث میں آپ کو ابن معین نے مکذب بیان کیا ہے مگر تاہم ابن ماجہ نے تفسیر میں آپ سے تخریج کی ہے۔ ابتداء میں آپ کوفہ کے قاضی تھے پھر بغداد کے قاضی ہوئے اور ۱۸۲ھ؁ میں ...

امام عبد اللہ مبارک

عبد بن مبارک بن واضح الخظی المروزی: شہر مرد میں ۱۱۸ھ؁ میں پیداہوئے۔ کنیت ابو عبد الرحمٰن رکھتے تھے۔ جاپ آپ کا بڑا پر ہیز گار و  متقی تھا اور ہمدان کے ایک سو دا گر کا جو قبیلہ بنی حنظلہ میں سے تھا،غلام تھا اس لئے آپ حنظلی کہتے ہیں اور والدہ آپ کی خوا زمی تھی ۔ آپ ابتداء یں شراب خوری اور ا کے لوزمات لہو لعب میں بڑے مصروف رہتے تھے ۔آپ کی توبہ کا یہ سبب ہوا کہ آ پ نے موسم بہار میں ایک دن مع اپنے یاروں و دوستوں کےایک باغ میں بڑا جلسہ کیا جس میں د...

قاضی عبد الکریم  

            عبد الکریم بن محمد جرجانی : فقیہ جید محدث مقبول تھے ، مدت تک قضا کا کام انجام دیا ار روایت امام ابو حنیفہ سے کی اور حدود ۱۸۰ھ؁ میں وفات پائی۔ ترمذی نے آپ سے تخریج کی ۔’’کوکب اسلام ‘‘ آپ کی تاریخ وفات ہے۔ (حدائق الحنفیہ)...

نوح بن ابی مریم

    نوح بن ابی مریم ابو عصمہ مرزوی الشہیر با لجامع:فقہ امام ابو حنیفہ اور ابن ابی لیلیٰ سے اخذ کی اور حدیث کو حجاج بن ارطاۃ اور نیز زہری و مقاتل سے سنا اورتفسیر کو کلبی وغیرہ اور مغازی کو محمد بن اسحٰق سے اخذ کیا ۔ جامع آپ کو اس لئے کہتے تھے کہ آپ جامع علوم تھے اور آپ کی چار مجلسیں ہو اکرتی تھیں ،ایک حدیث و آثار،دوم اقاویل امام ابو حنیفہ،سوم نحو ، چہارم اشعار وادب ،بعض کہتے ہیں کہ جامع آپ کو اس لئے کہتے تھے کہ آپ نے سب سے پہلے امام ابو ...

زہیر بن معاویہ

              زہیر بن[1] معاویہ خدیج کوفی : ۱۰۰ھ؁ میں پیدا ہوئے ، امام ابو حنیفہ کے اصحاب میں سے محدث ، ثقہ فقیہ فاضل تھے اور کنیت ابو خیثمہ رکھتے تھے ۔ حدیث کو امام اعمش اور ان کے طبقہ سے سنا اور آپ سے یحٰی بن قطا ن نے روایت کی ۔ سفیان ثوری کہتے ہیں کہ آپ کے زمانے میں آپ جیسا کوفہ میں اور کوئی نہ تھا ۔ یحٰی بن معین وغیرہ محدثین نے آپ کی توثیق کی اور ۱۷۳ھ؁ یا ۱۷۴ھ؁ میں آ پ فوت ہوئے ۔ اصحاب صح...