ضیائے کرامات  

جا اچھی ہو جائیں گی

جا اچھی ہو جائیں گی مولانا اعجازعلی خان صاحب کا بیان ہےکہ: میری بھاوج علیل ہو گئیں، تمام لوگ ناامید ہوگئے تھے،والدہ محترمہ نے فرمایا کہ اعلیٰ حضرت کےمزارشریف پرجاکرعرض کر۔ میں حاضرہوا اور بچی کوپائنتی میں ڈال دیا۔خداکی قسم فوراً فرمایا ’’جا اچھی ہو جائیں گی‘‘ میں آیا والدہ صاحبہ سے عرض کیا اُسی وقت سےصحت شروع ہوگئی۔ 20-22دن میں بالکل اچھی ہوگئیں۔ (حیاتِ اعلیٰ حضرت ص882 از مولانا ظفرالدین بہاری مکتبہ نبویہ لاہور( ...

بعدِ وصال تسلی دی

بعدِ وصال تسلی دی جنابِ حاجی کفایت اللہ صاحب کا بیان ہےکہ: نیازاحمدخان صاحب کی ایک بھتیجی دیندار اور اعلیٰ حضرت﷫کی مریدہ تھیں،شوہر اس کا بہت آزاد مزاج تھا۔جب وہ اپنے شوہر کی بے توجہی کی وجہ سے ملول اور مغموم ہوتیں تو اعلیٰ حضرت﷫وصال کے بعد خواب میں تشریف لاکر انہیں تسلی دیتے اور ان کی تسکین فرماتے۔ (حیاتِ اعلیٰ حضرت ص914 از مولانا ظفرالدین بہاری مکتبہ نبویہ مطبوعہ لاہور) ...

اُٹھ اورنماز پڑھ

اُٹھ اورنماز پڑھ جنابِ سیدایوب علی صاحب کاایک واقعہ یوں بیان کرتے ہیں کہ: غالباً 14ذوالحجہ 1333ھ کی شب سید قناعت علی سوئے ہوئے تھے، خواب میں حضور سیدی ومرشدی اعلیٰ حضرت﷫کی زیارت سے مشرف ہوئے کہ آپ دستِ راست کا انگوٹھا اوردرمیانی انگلی پیشانی پررکھ کرحرکت دیتے ہیں اور ارشادفرماتے ہیں’’اُٹھ اور نماز پڑھ، پانچ بجے ہیں‘‘۔معا ًآنکھ کھلتی ہے،گھڑی کو دیکھتے ہیں تو ٹھیک پانچ بجے کا وقت ہے، اُٹھے اور وضو کیاپھر فجر کی نماز ادا ...

وہ کافر تمہارا کچھ نہیں بگاڑ سکتا

وہ کافر تمہارا کچھ نہیں بگاڑ سکتا سید سردار احمد صاحب کا بیان ہے کہ: ایک مرتبہ میراانچارج آفیسر بہت ناخوش ہوگیا اور میری نقصان رسانی کا جویاں رہنے لگا جس کے باعث میں بہت پریشان تھا اور میں نے وہ وظائف جو حضور نے بتائے تھے پڑھنے شروع کر دیئے۔ ایک روز اس نے مجھ پر بہت تشدد کیا،میں نے اس پر یشانی کے باعث کھانا بھی نہ کھایا اورنماز ِعشاء پڑھ کر سو رہا، خواب میں سیدی اعلیٰ حضرت تشریف لائے اور فرمایا کیوں پریشان ہوتے ہو،وہ کافر تمہارا کچھ نہیں بگاڑ ...

پھانسی منسوخ ہوگئی

پھانسی منسوخ ہوگئی جنا بِ ذکااللہ خان صاحب کا بیان ہےکہ: مولوی اصغر علی خان صاحب وکیل رئیسِ’’شہر کہنہ‘‘کے ایک قریبی عزیزقتل کے مقدمہ میں گرفتار ہوگئے،مقدمہ چلا،بریلی کی عدالت سے پھانسی کا حکم ہوگیا،الٰہ آباد میں اپیل کی،ان کےرشتہ داربہت پریشان تھے۔ ایک جمعہ کو ان کے خاص عزیز حاضر ِخدمت ِاقدس ہوئے اور سارا واقعہ بیان کیا۔اعلیٰ حضرت سن کر خاموش ہوگئے،اتنے میں عصر کی نماز کا وقت ہوگیا۔ اعلیٰ حضرت نے نمازِ عصر کے بعد صحن ...

دفن شدہ خزانہ کی جگہ بتائی

دفن شدہ خزانہ کی جگہ بتائی نبیرئہ محدثِ سورتی قاری احمد صاحب کا بیان ہے کہ: پیلی بھیت کی ایک سیدانی صاحبہ نے اعلیٰ حضرت کی خدمت میں عرض کیا حضرت! ایک سال ہوا ہے، میں نے کچھ روپے اور اشرفیاں اپنے کمرے کے ایک کونے میں گاڑ دیئے تھے مگر اب وہاں دیکھتی ہوں تو نہیں ہیں،لڑکی کی شادی قریب ہے اور اسی لئے رکھے تھے ۔ اعلیٰ حضرت نے فرمایاکہ’’وہ اب اس جگہ نہیں ہیں بلکہ وہاں سے ہٹ کر کوٹھڑی میں فلاں جگہ پہنچ گئے ہیں‘‘۔اُس جگہ تلاش کئ...

دروازے پر شیر کاپہرہ

دروازے پر شیر کاپہرہ جنابِ سیدایوب علی کا بیان ہے کہ: جس مکان میں حضرت مولانا حسن رضا خان (اعلیٰ حضرت کے منجھلے بھائی)رہتے تھے اُس کی شمالی دیوار برسات میں گر گئی،عارضی طور پر پردے کا اہتمام و انتظام کر لیا گیا۔ یہی مکان اعلیٰ حضرت کا قدیم آبائی مکان تھا اور پہلے اعلیٰ حضرت بھی اسی مکان میں تشریف رکھتے تھے۔ مسئلہ قربانیء بقر (گائے کی قربانی )کی وجہ سے مخالفت کی بنا پر رات کے وقت اعلیٰ حضرت پر ایک غیر مسلم نے اُس گری ہوئی دیوار کی طرف سے حملہ...

بابَرَکت چَوَنّی

بابَرَکت چَوَنّی ایک باراعلیٰ حضرت امام احمد رضا خان علیہ رحمۃ الرحمٰن کو حاجیوں کے استقبال کے لیے بندرگاہ جانا تھا،طے شُدہ سُواری کو آنے میں تاخیر ہوگئی تو ایک اِرادت مند غُلام نبی مستری بِغیر پوچھے تانگہ لینے چلےگئے۔ جب تانگہ لے کر پلٹے تو دُور سے دیکھا کہ سُواری آچکی ہے لہٰذا تانگے والے کو چَوَنِّی (ایک روپے کا چوتھائی حِصّہ) دے کر رخصت کیا۔ اِس واقعہ کا کسی کو علم نہیں تھا ۔ چار۴ روز کے بعد مستری صاحِب بارگاہِ اعلیٰ حضرت﷫میں حاضِرہوئےتو اعلی...

بارِش برسنے لگی

بارِش برسنے لگی اعلیٰ حضرت امام احمد رضا خان علیہ الرحمۃ الرحمٰن کی خدمت میں ایک نُجُومی حاضر ہوا، آپ﷫نے اُس سے فرمایا:کہئے، آپ کے حساب سے بارِش کب آنی چاہیے؟ اس نے زائچہ بنا کر کہا:’’اس ماہ میں پانی نہیں آیَندہ ماہ میں ہوگی۔‘‘اعلیٰ حضرت﷫نے فرمایا: اللہ عزوجل ہر بات پر قادِر ہے وہ چاہے تو آج ہی بارِش برسادے۔آپ سِتاروں کو دیکھ رہے ہیں اور میں ستاروں کے ساتھ ساتھ سِتارے بنانے والے کی قدرت کو بھی دیکھ رہا ہوں۔ دیوار پر گھڑی ...

گھڑےمیں پانی بھرگیا

گھڑےمیں پانی بھرگیا سیدایوب علی صاحب ایک واقعہ بیان کرتے ہیں کہ: ایک روز فجرکے وقت حضرت پیرانی صاحبہ دیکھتی ہیں کہ کسی گھڑے میں پانی نہیں، مجبوراً اعلیٰ حضرت﷫سے دریافت کیا کہ نماز کا وقت جا رہا ہے کسی گھڑے میں پانی نہیں ہے،کیا کِیا جائے؟اعلیٰ حضرت﷫یہ بات سن کر فوراً ایک گھڑے کے اوپر دست ِمبارک رکھ کر ارشادفرماتے ہیں کہ: ’’پانی تو اس گھڑے میں اوپر تک بھرا ہوا ہے لو وضو کرلو‘‘ دیکھا تو واقعی پانی گھڑے میں اوپر تک بھرا ہو...