اسمائے شہدائے غزوۃ احد

اسی ماہ کی چودہ اور پندرہ تاریخ کو اسلام اور کفر کا دوسرا بڑا معرکہ(جسے ’’غزوہ اُحد‘‘ کہتے ہیں) ۳ہجری میں پیش آیا۔ امام الانبیاء والمرسلین علیہ الصلوٰۃ والسلام کی قیادت میں صحابۂ کرام علیہم الرضوان جبل اُحد کے نیچے میدان میں صف آراء ہوئے۔ اسلامی افواج سات سو ۷۰۰ سے کم افراد پرمشتمل تھی۔ غزوۂ احد کے شہداء کے نام ذیل میں پیش کئے جا رہے ہیں:

۱۔ حضرت سیّدنا حمزہ بن عبدالمطلب بن ہاشم﷜

۲۔ حضرت سیّدنا عبداللہ بن حجش ﷜

( ان کا تعلق قریش کی شاخ بنی امیہ بن عبد شمس سے تھا۔)

۳۔ حضرت سیّدنا معصب بن عمیر﷜

انہیں ابن قمہ لیثی نے شہید کیا، ان کا تعلق قریش کی شاخ بنی عبدالدار بن قصی سے تھا۔

۴۔ حضرت سیّدنا شماس بن عثمان ﷜

ان کا تعلق قریش کی ایک اور شاخ بنی مخزوم بن یقطہ سے تھا۔

۵۔ حضرت سیّدنا عمرو بن معاذ بن نعمان﷜ (ان کا تعلق بنی عبدالاشہل سے تھا)۔

۶۔ حضرت سیّدنا حارث بن انس بن رافع﷜ (بنی عبدالاشہل)

۷۔ حضرت سیّدنا عمارہ بن زیادہ بن سکن﷜ (بنی عبدالاشہل)

۸۔ حضرت سیّدنا سلمہ بن ثابت بن دقش ﷜

۹۔ حضرت سیّدنا عمرو بن ثابت بن دقش ﷜

۱۰۔ حضرت سیّدنا ثابت بن دقش ﷜

۱۱۔ حضرت سیّدنا رفاعہ بن دقش ﷜

۱۲۔ حضرت سیّدنا حسیل بن جابر﷜ (انہیں یمان بھی کہا جاتا تھا یہ حذیفہ کے باپ ہیں)

۱۳۔ حضرت سیّدنا صیفی بن قینطی﷜

۱۴۔ حضرت سیّدنا حباب بن قینطی﷜

۱۵۔ حضرت سیّدنا عباد بن سہل ﷜

۱۶۔ حضرت سیّدناحارث بن اوس بن معاذ﷜

۱۷۔ حضرت سیّدنا ایاس بن اوس ﷜

(بن عیتک بن عمرو بن عبدالاعلم بن زعوراء بن حشم بن عبدالاشہل)

۱۸۔ حضرت سیّدنا عبید بن تیہان﷜ (اور براویت ابن ہشام عیتک بن تیہان)

۱۹۔ حضرت سیّدنا حبیب بن یزید بن تیم﷜

۲۰۔ حضرت سیّدنا یزید بن خاطب بن امیہ بن رافع﷜(بنی ظفر)

۲۱۔ حضرت سیّدنا ابو سفیان بن حارث بن قیس بن زید﷜(بنی ضبیعہ)

۲۲۔ حضرت سیّدنا حنظلہ بن ابی عامر﷜ (بنی حیفی بن نعمان بن مالک بن امۃ بن ضبیعہ)

ان کا خطاب غسیل الملائکہ تھا (کیونکہ انہیں شہید ہونے کے بعد فرشتوں نے غسل دیا تھا)انہیں شداد بن الودبن شعوب لیتی نے شہید کیا تھا۔

۲۳۔ حضرت سیّدنا انیس بن قتادہ ﷜(بنی عبیدہ بن زید)

۲۴۔ حضرت سیّدنا ابو حیہ﷜(بنی ثعلبہ بن عمرو بن عوف، سعد بن خثیمہ کی ماں جائے بھائی)

۲۵۔ حضرت سیّدنا عبداللہ بن جبیر بن نعمان﷜۔(بنی ثعلبہ)

(رماۃ،تیراندازوں)کے امیر تھے۔

۲۶۔ حضرت سیّدنا خثیمہ ابوسعد بن خثیمہ﷜ (بنو اسلم بن امراء القیس بن مالک بن الاوس)

۲۷۔ حضرت سیّدنا عبداللہ بن سلمہ﷜(بن عجلان میں سے تھے جو بنی سلمہ کے حلیف تھے)

۲۸۔ حضرت سیّدنا سبیع بن حاطب بن حارث بن قیس بن حبشہ بن معاویہ بن مالک﷜

۲۹۔ حضرت سیّدنا عمروبن قیس﷜، بروایت ابن ہشام عمرو بن قیس بن زید بن سواد

۳۰۔ حضرت سیّدنا قیس بن عمرو بن قیس﷜۔ یہ عمرو بن قیس کے بیٹے تھے۔

۳۱۔ حضرت سیّدنا ثابت بن عمرو بن زید﷜ (بروایت ابن اسحق، بنی نجار)

۳۲۔ حضرت سیّدنا عامر بن مخلد﷜ (بروایت ابن اسحق)

۳۳۔ حضرت سیّدنا ابوہیرہ بن حارث بن علقمہ بن عمرو بن ثقف بن مالک بن مبذول ﷜

۳۴۔ حضرت سیّدنا عمرو بن مطرب بن علقمہ بن عمرو﷜(بن مبذول)

۳۵۔ حضرت سیّدنا اوس بن ثابت بن المنذر﷜(بنی عمرو بن مالک)

بروایت ابن ہشام، اوس بن ثابت، حسان بن ثابت کے بھائی ہیں۔

۳۶۔ حضرت سیّدنا انس بن نضر﷜ بن ضمضم بن زید بن حرام بن جندب بن عامر بن غنم بن النجار (بنی عدی بن نجار سے ابن ہشام نے کہا ہے کہ انس بن النضر، انس بن مالک کے چچا اور رسول اللہﷺ کے خادم ہیں۔

۳۷۔ حضرت سیّدنا قیس بن مخلد﷜(بنی مازن بن النجار)

۳۸۔ حضرت سیّدنا کیسان﷜(بنی مازن کے غلام)

۳۹۔ حضرت سیّدنا سلیم بن حارث﷜(بنی دینار بن النجار)

۴۰۔ حضرت سیّدنا نعمان بن عبد عمرو﷜(بنی دینار)

۴۱۔ حضرت سیّدنا خارجہ بن زیدابوزہیر﷜(بنی حارث بن خزرج)

۴۲۔ حضرت سیّدنا سعد بن الربیع بن عمرو بن ابوزہیر﷜ (قبیلہ بنی حارث)

۴۳۔ حضرت سیّدنا اوس بن الارم بن زید بن قیس بن نعمان بن مالک بن ثعلبہ بن کعب﷜۔

۴۴۔ حضرت سیّدنا مالک بن سنان بن عبید بن ثعلبہ بن عبید بن الجبر﷜۔

(ابوسعید خدری کے والد، مدفون جنت البقیع)

۴۵۔ حضرت سیّدنا سعید بن سوید بن قیس، بن عامر بن عباد الجز﷜ (بنو الجز)

۴۶۔ حضرت سیّدنا عتبہ بن ربیع بن رافع بن معاویہ بن عبید بن ثعلبہ بن عبید﷜ (بنو الجز)

۴۷۔ حضرت سیّدنا ثعلبہ بن سعد بن مالک بن خالد بن ثعلبہ۔ بن حارثہ بن عمرو بن خزرج بن ساعدہ﷜

۴۸۔ حضرت سیّدنا ثقف بن فردہ بن البدی﷜ (بنو ساعدہ)

۴۹۔ حضرت سیّدنا عبداللہ بن عمرو بن وہب بن ثعلبہ وقش بن ثعلبہ بن طریف﷜ (بنو طریف)

۵۰۔ حضرت سیّدنا ضمرہ﷜۔ یہ بنو طریف کے حلیف، بنو جہبنہ کے قبیلے سے ہیں۔

۵۱۔ حضرت سیّدنا نوفل بن عبداللہ﷜(بنو عوف)

۵۲۔ حضرت سیّدنا عباس بن عبادہ بن فضلہ بن مالک بن العجلان﷜ (بنو عوف)

۵۳۔ حضرت سیّدنا نعمان بن مالک بن ثعلبہ بن فہربن غنم بن سالم﷜ (بنو عوف)

۵۴۔ حضرت سیّدنا مجذربن زیاد﷜ (بنو عوف)

۵۵۔ حضرت سیّدنا عبادہ بن سماس﷜ (بنوعوف)

۵۶۔ حضرت سیّدنا رفاعہ بن عمرو﷜ (بنو جلی)

۵۷۔ حضرت سیّدنا عبداللہ بن عمرو بن حرام بن ثعلبہ بن حرام﷜ (بنو سلمہ)

۵۸۔ حضرت سیّدنا عمرو بن جموح بن زید بن حرام﷜(بنوسلمہ)

۵۹۔ حضرت سیّدنا خلاد بن عمرو بن جموح بن زید بن حرام﷜ (بنو سلمہ)

۶۰۔ حضرت سیّدنا ابوایمن۔ مولی عمروبن جموح﷜

۶۱۔ حضرت سیّدناسلیم بن عمربن جدیدہ﷜(بنو سواد)

۶۲۔ حضرت سیّدنا عنترہ مولی سلیم بن جدیدہ﷜۔ یہ سلیم بن عمرو کے مولی ہیں۔

۶۳۔ حضرت سیّدنا سہل بن یس بن ابوکعب بن قین﷜(بنو سواد)

۶۴۔ حضرت سیّدنا زکوان بن عبدقیس﷜(بنو زریق بن عامر)

۶۵۔ حضرت سیّدنا عبید بن معلی بن لوذان ﷜۔(نوزریق بن عامر)ابن ہشام نے کہا: عبید بن معلی قبیلہ حبیب سے ہیں۔

۶۶۔ حضرت سیّدنا مالک بن نمیلہ﷜۔ (بنو مزینہ جو بنو معاویہ کے حلیف تھے۔)

۶۷۔ حضرت سیّدنا حارث بن عدلی بن خرشمہ بن امیہ بن عامر بن خطمہ﷜ (بنو خطمہ )

۶۸۔ حضرت سیّدنا مالک بن ایاس﷜(خزرج کی شاخ بنوسواد بن مالک)

۶۹۔ حضرت سیّدنایاس بن عدلی﷜ (بنو عمروبن مالک بن نجار)

۷۰۔ حضرت سیّدنا عمروبن ایاس﷜(بنو سالم عوف )

۷۱۔ حضرت سیّدنا قیس بن زید بن ضبیعہ﷜

۷۲۔ حضرت سیّدنا مالک بن امۃ بن ضبیعہ

تجویزوآراء